fbpx
News ODI Cricket T20I Cricket Test Cricket

تازہ ترین : یونس خان نے پاکستانی بیٹنگ کے حوالے سے بری خبر سنا دی

تفصیلات کے مطابق یونس خان جوکہ اس وقت پاکستان کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ مقرر ہوئے ہیں انھوں نے پریکٹس میچز میں دوران پاکستان کرکٹ ٹیم کے کچھ ٹاپ کے کھلاریوں کی پرفارمنس کو تسلی بخش قرار نہیں دیا ہے – یونس خان نے یہ بات ایک لائیو سیشن کے دوران میڈیا کے ساتھ کی – یونس خان نے یہ کہا کہ پاکستان کرکٹ ٹیم کے بہت سے ٹاپ کھلاڑیوں نے اس پریکٹس میچ کے دوران بہت معمولی سی کارکردگی دکھائی ہے – مگر اس کے ساتھ ساتھ یونس خان اپنی اس بات کو اس دلیل کے ساتھ پیش کر رہے ہیں کہ یہ صرف اس لیے ہوا ہے کیونکہ یہ سارے بولرز ایک دوسرے کی خامیوں کو جانتے تھے اس لیے بیٹسمن کوئی اچھی کارکردگی نہیں دکھا سکا ہے

مگر اگر ہم اس بات کو دوسرے تناظر سے دیکھیں تو ہم یہ بھی کہ سکتے ہیں کہ تمام بیٹسمن بھی تو ان تمام بولرز کی خامیوں کو جانتے تھے تو پھر ہمارے بیٹسمنوں نے ان بولرز کی ان خامیوں کی وجہ سے ان پچز پر سکور کیوں نہیں کیا ہے – اگر ہم صرف یونس خان کی حد تک بات کریں تو اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ یونس خان ایک بہت ہی اچھے کھلاڑی رہ چکے ہیں لیکن اب سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ کیا اب یونس خان ایک اچھے بیٹنگ کوچ ثابت ہو سکتے ہیں

جو وجہ یونس خان نے پیش کی ہے ہو سکتا ہے وہ خود بھی اس وجہ سے مکمل مطمئن نہ ہوں مگر اس وقت انھوں نے اس بات کا بہانہ بنا کر جان چھڑا لی ہے مگر جب یہی پرفارمنس پاکستانی ٹیم کے بیٹسمنوں نے انٹرنیشنل میچ کے دوران دکھا دی تو پھر یونس خان کے پاس اس کا کیا جواب ہو گا -ہماری دعا ہے کہ کہیں یونس خان کو اس کے لیے بھی تیاری نہ کرنی پڑ جائے

یونس خان نے مزید کہا کہ انھوں نے پریکٹس سیشن کے دوران اپنی پوری کوشش کی ہے اور ہر کھلاڑی کو ٹائم دیا ہے تاکہ وہ اچھے سے اچھا پرفارم کر سکیں – انھوں نے کہا کہ اس زمرے میں انھوں نے بابر اعظم کو بھی اتنا ہی ٹائم دیا ہے جتنا کہ انھوں نے کسی دوسرے کھلاڑی کو ٹائم دیا ہے – وہ مزید بات کرتے ہوئے کہ رہے تھے کہ یہ کھلاڑی پاکستان کرکٹ ٹیم کا مستقبل ہیں اور اگر ہم خاص کر بابر کے بارے میں بات کریں تو اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ وہ ایک شاندار کھلاڑی ہے

یونس خان نے بابر اعظم کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ اس وقت پر بہت زیادہ انحصار کیا جا رہا ہے اور اس پر یقینا بہت زیادہ پریشر بھی ہو گا اب یہ اس پر ہے کہ وہ اپنے اوپر بنی ہوئی توقعات کو کتنے اعتماد کے ساتھ پورا کرتا ہے – یونس خان نے مزید کہا ہے کہ اگر بابر اعظم 0 0 1 رنز بنا لیتے ہیں تو پھر ان کو 0 5 1 رنز کی طرف دیکھنا ہو گا اور اگر وہ اس نمبر کو بھی پورا کر لیتے  ہیں تو پھر ان کی سوچ 0 0 2 تک کی ہونی چاہیے اور اسی طرح کوئی کھلاڑی ایک بڑا پلیر بنتا ہے

یونس خان مزید کہتے ہیں کہ وہ جب سے پاکستان کرکٹ ٹیم کے ساتھ ہیں وہ بہت سارے معملات کو بڑے نزدیک سے دیکھ رہے ہیں اورووہ امید کرتے ہیں کہ تمام معاملات جو اس وقت ٹھیک نہیں ہے بہت جلد اچھی حالت میں آ جائیں گے – انھوں نے مزید بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ اظہر الی اور اسد شفیق کے معاملات پر بھی نظر رکھے ہوئے ہیں اور وہ اس کے علاوہ پریکٹس سیشنز کے بعد بھی اپنی ٹیم کی باڈی لینگویج کو سمجھنے کی کوشش کرتے رہتےہیں

یونس خان نے مزید کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ انگلینڈ کے اندر بیٹنگ کا ایشوز ہو سکتے ہیں اور یہ کوئی ہر کوئی جانتا ہے کیونکہ انگلینڈ کے اندر ایشیائی ٹیموں کے لیے بیٹنگ کرنا ہمیشہ سے ہی مشکل رہا ہے لہذا ہم نے کوشش کی ہے کہ ہر کھلاڑی کی بیٹنگ تکنیک کو بہتر کیا جا سکے

Leave a Comment