fbpx
News

ہمارے دور میں دنیا کا سب سے خطرناک بولر یہ پاکستانی تھا – ڈین جونز

ہمارے دور میں دنیا کا سب سے خطرناک بولر یہ پاکستانی تھا – جی ہاں دوستو یہ بات کوئی پاکستانی کھلاڑی نہیں بلکہ آسٹریلیا کے کھلاڑی ڈین جونز کہ رہے ہیں – ان کا کہنا ہے کہ انھوں نے ہمیشہ اس پاکستانی بولر کے سامنے آ کر خود کو مشکل میں محسوس کیا ہے اور اس بولر نے ہمیں کبھی بھی اپنا ٹارگٹ آسانی سے حاصل نہیں کرنے دیا تھا – ڈین جونز مزید کہتے ہیں کہ یہ بولر عمر میں بھی اتنا زیادہ نہیں تھا اور نہ ہی اس کا تجربہ اتنا زیادہ تھا مگر اس کے ٹیلنٹ نے ساری دنیا کو پریشان اور حیران کیا ہوا تھا – وہ دنیا کی کسی بھی پچ پر بیٹسمن کو پریشان کرنے کی صلاحیت رکھتا تھا

دوستو ڈین جونز کسی اور کی نہیں بلکہ سوئنگ آف سلطان وسیم اکرم کی بات کر رہے ہیں – ڈین جونز جب وسیم اکرم کے بارے میں یہ بیان دیا تو اس کے ساتھ ہی اس نے فیس بک پر ایک ویڈیو بھی اپلوڈ کر دی- یہ وہ ویڈیو ہے جس میں ایک میچ کے دوران وسیم اکرم نے ڈیوڈ بون کو ایک باؤنسر مارا تھا – اور باؤنسر خوش قسمتی سے ڈیوڈ کے ہیلمٹ پر لگ گیا تھا جس کی وجہ سے اس کو زیادہ چوٹ نہیں لگی تھی

دوستو آپ یہاں پر ایک اور بات بتاتے جائیں کہ جب وسیم اکرم نئے نئے انٹرنیشنل کرکٹ میں آئے تھے تو اس وقت وسیم اکرم باؤنسر مارنے میں بہت مشھور تھے اور ساری دنیا ان کے باؤنسر سے بہت ڈرتی تھی – ڈین جونز نے ساتھ یہ بھی لکھا ہے کہ جب وسیم اکرم نے بون کو باؤنسر مارا تو وہ بھی تھوڑے پریشان تھے کیونکہ اگلی باری ڈین جونز کی تھی لہذا اس حوالے سے وہ بون کو دلیر ہونے کی نصیحت کر رہے تھے

دوستو ڈین جونز نے وسیم اکرم کے بارے میں ایک اور بات بتائی جو شاید آپ کو بھی پہلی بار پتہ چلے – ڈین جونز کہتے ہیں کہ وسیم اکرم بہت کم ایسے کھلاڑیوں میں سے ہیں جنہوں نے کبھی بھی فرسٹ کلاس کرکٹ نہیں کھیلی تھی – جی ہاں دوستو وسیم اکرم سیدھا پاکستان کی نیشنل ٹیم میں آئے تھے اور وہی سے انہوں نے انٹرنیشنل کرکٹ کا آغاز کر دیا تھا جوکہ بہت ہی مشکل کام ہے

اس حوالے سے اگر ہم بات کریں تو آج ہی سہیل تنور نسیم شاہ کے بارے میں بھی یہی کہ رہے تھے کہ نسیم شاہ کو ابھی بھی پریکٹس اور اعتماد کی ضرورت ہے اور اس کے ساتھ ساتھ انھوں نے یہ بھی کہا کہ انٹرنیشنل کرکٹ مین کھیلنا کوئی آسان کام نہیں ہے اس کے لیے بندے کے اندر ایک خاص قسم کا ٹیلنٹ ہونا چاہیے – انھوں نے ساتھ یہ بھی کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ نسیم شاہ میں وہ ٹیلنٹ ہے مگر پھر اس کو بتہر کرنے میں ٹائم لگے گا

ہم دوبارہ پھر آتے ہیں اور وسیم اکرم کے بارے میں بات کرتے ہیں جنہوں نے 4 0 1 ٹیسٹ میچز میں 4 1 4 وکٹس حاصل کی اور ان کی وکٹس لینے کی ایوریج 2 6 . 3 2 کی تھی اور اگر ہم بات کریں ون ڈے کرکٹ کی تو وسیم اکرم نے اس فارمیٹ میں 2 0 5 وکٹس حاصل کی ہیں – وسیم اکرم نے 3 0 0 2 کے ورلڈ کپ کے بعد اپنی ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیا تھا اور اس وقت ان کی عمر 5 3 سال تھی

مزید پڑھیں: پاکستانیوں کے ایسے 0 2 ریکارڈ جو آج تک نہیں ٹوٹے

اور اگر ہم بات کریں ٹیسٹ کرکٹ کی تو وسیم اکرم نے 2 0 0 2 میں ہی ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیا تھا – وسیم اکرم اپنے دور کے واقعی بہت اچھے بولر تھے اور جب بھی کبھی کسی بھی اچھے بیٹسمن سے یہ پوچھا گیا ہے کہ وہ بولر کو کھیلتے ہوئے پریشانی محسوس کرتے تھے تو ہر اچھے بیٹسمن نے وسیم اکرم کا نام ضرور لیا ہے

Leave a Comment