پاک بھارت میچز کو لیکر وکی بھائی نے نئی بات کر ڈالی

وقار یونس کرکٹ کی دنیا میں ایک عظیم نام ہیں -دنیاۓ کرکٹ میں اگر کوئی وقار یونس کے نام بڑی عزت اور احترام سے لیا جاتا ہے – وقار یونس کا شمار اپنے دور کے ٹاپ کلاس بولرز میں کیا جاتا تھا اور ان کی وسیم اکرم کے جوڑی کو کون نہیں جانتا ہے – وقار یونس انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائر ہونے کے بعد پاکستان کرکٹ ٹیم کے کوچ بھی رہ چکے ہیں

حالیہ دنوں میں اپنے ایک انٹرویو میں پاک بھارت سیریز کی بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ بات نہ گزیر ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان کرکٹ نہ ہو – انہوں نے کہا کہ دونو ں ملکوں کی ٩٥ فیصد عوام ایسی ہے جوکہ دونوں ٹیموں کے درمیان کرکٹ کو دیکھنا چاہتی ہے – مزید یہ کہ دونوں ملکوں کے سربراہوں کو چاہیے کہ وہ کھیل اور سیاست کو علیدہ علیدہ رکھیں

وقار یونس نے انٹرویو میں بات کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ اور انڈین کرکٹ ٹیم کے بورڈ کو اس بات کا خاص خیال رکھنا چاہیے کہ وہ دونوں ملکوں کے درمیان مستقل بنیادوں پر کرکٹ کا اہتمام کریں تاکہ دونوں ٹیموں کے کھلاڑی اپنے اپنے فینز کو خوش کر سکیں -انہوں نے مزید بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ امید کرتے ہیں کہ دونوں ملکوں کی ٹیمیں جلد ہی آپس میں کرکٹ کھیلیں

وقار یونس نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ دونوں ملکوں کی ٹیموں کو نیوٹرل مقام کرکٹ نہیں کھیلنا چاہیے بلکہ وہ یا تو پاکستان میں کرکٹ کھیلیں یا پھر انڈیا میں اس سے دونوں ٹیموں کے فینز کو زائدہ خوشی ملتی ہے اور مزید یہ کہ دونوں  ٹیموں کے فینز بھی یہی چاہتے ہیں کہ دونوں ٹیمیں اپنے اپنے ملک میں سیریز کھلیں

مزید پڑھیں: اگر پی ایس ایل بچانا ہے تو میری طرف آؤ-شعیب اختر

اس کے علاوہ وقار یونس نے گوتم گھمبیر اور شاہد آفریدی کے معاملے میں بھی کہا کہ اب ان دونوں کو آپس کی نوک جھوک کو ختم کر دینا چاہیے اہوں نے مزید کہا کہ وہ اس معاملے میں کسی بھی جگہ بیٹھ جائے اور اچھے طریقے سے معاملات کو حل کریں اہوں نے مزید کہا کہ جب بھی کبھی کھلاڑی ایک دوسرے کے خلاف بیان دیتے ہیں تو لوگ ان باتوں کو انجوائے کرتے ہیں مگر لانگ ٹرم میں اس کا کوئی فائدہ نہیں ہوتا ہے

You May Also Like

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *