fbpx
News

حفیظ نے رپورٹ شیئر کرکے سارے ملک کو ذلیل کروا دیا – دیکھیں غیر ملکی کرکٹرز کیا کہ رہے ہیں

میرے عزیز قائرین آجکل کرکٹ کو لیکر جو خبر سب سے زیادہ اہم ہے وہ تو آپ جانتے ہی ہیں – جی ہاں دوستو جیسے ہی محمّد حفیظ نے اپنا ٹیسٹ کروا کے اس کی رپورٹ اپنے ٹویٹر پر شیئر کی تو اس کے ساتھ ہی پی سی بی کی اپنی اہلیت پر شک ہونا شروع ہو  گیا اور کچھ لوگوں نے تو باقاعدہ مذاق بھی کرنا شروع کر دئیے اور یہ نہ سوچا کہ اس پر ہماری اپنی ہی بے عزتی ہے

اور رہی بات کرونا کے پازیٹو یا پھر نیگیٹو آنے کی کہانی تو اس میں ابھی تک کوئی بات ورلڈ لیول پر بھی کلیر نہیں ہو سکی ہے کہ کس بندے کو کرونا ہے یا نہیں ہے – آپ کہیں سے ٹیسٹ کروا لو تو آپ کو پازیٹو ملے گا اور پھر دوسری جگہ سے کروا لو تو یہ نیگیٹو ملے گا – پاکستان میں تو یہ سب کچھ چل رہا ہے – مگر بتانے والی بات یہ ہے کہ اگر حفیظ نے ٹیسٹ کروا کر اپنا نتیجہ لے ہی لیا تھا تو پھر اس کو سب سے پہلے اپنے بورڈ سے بات کرنی چاہے تھی

یعنی کہ اس کو فورا اپنے پی سی بی کے میڈیکل یونٹ سے بات کرنی چاہیے تھی کہ آپ نے جو ٹیسٹ کیا ہے وہ غلط ہے یا پھر جہاں سے میں نے کروایا ہے وہ لیبارٹری مجھے غلط بتا رہی ہے – مگر محمّد حفیظ نے اپنا ٹیسٹ پازیٹو آتے ہی ٹارزن بننے کی کوشش کی اور ساتھ ہی اپنی رپوٹ ٹویٹر پر لگا دی جیسے کوئی قلعہ فتح کر لیا ہو اور ایک لمحے کے لیے بھی نہیں سوچا ہے اس کے اس عمل سے کیا نتائج نکل سکتے ہیں

چلے ایک لمحے کے لیے سوچ بھی لیں کہ محممد حفیظ کا نتیجہ غلط تھا جو کہ پی سی بی کی طرف سے آیا تھا اور جو ٹیسٹ باہر کی لیبارٹری سے کروایا تھا وہی ٹھیک تھا تو کیا پھر اس کی اس طرح تشہر کرنا بنتی تھی – اب اس کا سب سے بڑا نقصان جو ہوا ہے وہ یہ ہے کہ انٹرنیشنل لیول پر ہمارے پی سی بی کے میڈیکل یونٹ پر انگلیاں اٹھائیں جائیں گی اور اس کا مذاق اڑایا جائے گا اور بلکل ایسا ہی ہو رہا ہے

مائکل ہولڈنگ جوکہ ویسٹ انڈیز کے سابق کھلاڑی ہیں ان کا آج بیان اتا ہے انھوں نے حفیظ کا حوالہ تو نہیں دیا مگر اس بات کہ دی ہے کہ پاکستان کے لیے یہ بہتر ہے کہ وہ انگلینڈ کے ساتھ انگلینڈ میں ہی سیریز کھیلے کیونکہ انگلینڈ میں کرونا کے حالت بہت بہتر ہیں اور انھوں نے ساتھ یہ بھی کہا کہ آنے والے دنوں میں حالات وار نرم ہو رہے ہیں اور وہاں پر لوگوں کے درمیان فاصلہ 6 فٹ سے کم کر کے 3 فٹ کر دیا جائے گا – تو اس کا مطلب ہے کہ حالت بہتر ہو رہے ہیں

مزید پڑھیں: محمّد عامر کا مصباح الحق کے بارے ایسا بیان ——کہ ہر کوئی حیران

اس کے بدلے انھوں کہا کہ پاکستان میں کرونا کے حالات ابھی بہتر نہیں ہیں تو لہذا پاکستانی ٹیم کو چاہیے کہ جلد از جلد انگلینڈ میں آ جائیں اور اپنی سیریز کی باقی تیاری انگلینڈ میں ہی آ کر کریں – یہ تھے ویسٹ انڈیز کے مائکل ہولڈنگ  جس کا بیان آپ پڑھ رہے تھے – محمّد حفیظ ہمارے سینئر سورس ہیں اور ہم ان کی قدر کرتے ہیں مگر ان کو چاہیے کہ وہ بھی دانشمندی کا ثبوت دیں اور پاکستان کرکٹ بورڈ کی عزت کو اپنی عزت سمجھیں

Leave a Comment